خیالات ونظریات

مسجد میں عورتوں کا داخلہ: غلو نہ بھیجنے میں ہو اور نہ منع کرنے میں

ایسے معاشرے میں جہاں مسجد میں عورتوں کا داخلہ جرم عظیم سمجھا جاتا ہو ایسے معاشرے میں اصل اسلامی تعلیمات کو مناسب طریقے سے حکمت کے ساتھ پیش کرنا چاہیے. اور اگر کسی مسجد میں عورتوں کے لیے بھی نماز کا انتظام و اہتمام ہو تو اشتہار و خبر کرنے میں کوئی حرج نہیں. غلو نہ بھیجنے میں ہو اور نہ منع کرنے میں. اسی طرح انہیں یہ بھی بتانا...

← مزيد پڑھئے

ڈاکٹر مہاتیر، سی پیک اور عمران

پاک چین اقتصادی راہداری (سی پیک) منصوبے پر کئی سوالیہ نشان لگ گئے ہیں، خاص طور وزیراعظم عمران خان کے مشیر تجارت عبدالرزاق داؤد نے سرکاری مؤقف کے برعکس سی پیک کی مخالفت کی ۔ دیکھنا یہ ہے کہ ہم قومی مفادات کی نگہبانی بہتر انداز میں کیسے کرسکتے ہیں لیکن سب سے پہلے یہ وضاحت ضروری ہے کہ سی پیک صرف تجارتی راہداری نہیں پاکستان کیلئے سٹریٹجیک اہمیت کا...

← مزيد پڑھئے

لکم دینکم ولی دین

تحریر : محمّد ہاشم خان / ممبئی جب جب محرم کا مہینہ شروع ہوتا ہےصحابہ کرام رضوان اللہ علیہم اجمعین کو لعن طعن کرنے کا سلسلہ بھی شروع ہوجاتا ہے۔اچھے خاصے روشن خیال شیعہ بھی مسلمان نظرآنے لگتے ہیں۔اگر کسی کو تکلیف ہے تو وہ بلاشبہ مجھے انفرینڈ کرکے جاسکتا ہے کہ میں آل رسولؐ کی عظمت و توقیر کا قائل ضرور ہوں لیکن ان کے نام پر نسل پرستی...

← مزيد پڑھئے

سلمان ندوی! بس، اب بہت ہوچکا

(بقلم: عبدالرحیم ندوی)      بزرگوں کے بےجا لاڈپیار نے تم کو انتہائی ضدی اور سرکش بنادیا ہے،   تمھاری اس سرکشی نے مادر علمی دارالعلوم ندوۃ العماء کو ناقابل تلافی نقصان پونچایا،     حضرت مولانا علی میاں رح کے کوئی لڑکا یا کوئی لڑکی نہیں تھی اس کے باوجود تم جھوٹ بول کر خود کوحضرت کا نواسہ بتاتے رہے، سعودی عرب اور خلیج کے دیگر ممالک سے حضرت...

← مزيد پڑھئے

بھارت: طلاق کے معاملہ میں سلفی مسلک سب سے درست: مولانا وحیدالدین خان

انٹرویو: نثار احمد معروف اسلامی اسکالر اورملک وبیرون ملک میں مقبول،  امن کے سفیر تصور کئے جانے والے معروف عالم دین مولانا وحید الدین خان نے  خصوصی بات چیت میں کہا کہ مسلمانوں کے لئے طلاق ثلاثہ کوئی مسئلہ نہیں ہے بلکہ صرف کچھ فتووں کی بنیاد پر یہ معاملہ بگڑ گیاہے۔ طلاق کے معاملے میں سلفی مسلک سب سے بہتر ہے۔ مولانا وحید الدین خان نے کہا کہ آل...

← مزيد پڑھئے

نیوز چینل اب عوام کانہیں ، حکومت کا ہتھیار ہے ۔ بقلم : ۔ رویش کمار

آئندہ انتخابات عوام کے وجود کا انتخاب ہے ۔اس کو اپنے وجود کیلئے لڑنا چاہئے ۔ جس طرح میڈیا ان پانچ سالو ں میں عوام بے دخل کیا ہے ۔ اس کی آواز کو کچلا ہے ۔ اس کودیکھ کوئی بھی سمجھ سکتا ہے کہ 2019ء کا انتخابات میڈیا سے عوام کو بے دخلی کا آخری دھکا ہوگا ۔ انتخابات صرف نو مہینہ باقی رہ گئے ہیں ۔پانچ میں میڈیا...

← مزيد پڑھئے

عمران خان کی مسکراہٹ سمٹ رہی ہے

حکمرانی کی آرزو سب کو ہوتی ہے۔ لیکن یہ اتنی ظالم چیز ہے کہ خواتین سے ان کا حسن چھین لیتی ہے۔ حضرات سے ان کی معصومانہ مسکراہٹ۔ پھر بال اڑنے لگتے ہیں۔ راتوں کی نیند غائب ہوجاتی ہے۔ پورے ملک کا مالک ہونے کے باوجود چند افسروں کا محتاج ہوکر رہ جاتا ہے۔ ملٹری سیکریٹری کے مقرر کردہ اوقات اور اعمال کا پابند ہوتا ہے۔ عمران خان بھی اسی...

← مزيد پڑھئے

بلی کے گلے میں گھنٹی باندھے کون ؟(نیپال میں عربی مدارس کی موجودہ صورتحال کے تناظر میں)

نیپال میں عربی مدارس کے ایشوز کو لیکر کافی دنوں سے  ایک پیچیدہ مسئلہ بنا ہوا ہے ، اس کو حل کرنے کیلئے کچھ لوگ اپنی اپنی سطح پر کاوشیں بھی کر رہے ہیں، مسلسل بحث و مباحثے اور ڈسکشن ہوتے رہتے ہیں ، اصحاب قلم  کی جانب سے مختلف مضامین بھی لکھےجا چکے ہیں لیکن ابھی تک کوئی مثبت نتیجہ سامنے نہیں دکھ رہا ہے۔   ابھی حال ہی میں...

← مزيد پڑھئے

مذہبی گھرانوں کے بچوں میں کامیابی کا تناسب عام طلبہ سے زیادہ

برطانوی ماہرین کی تحقیق کے مطابق مذہبی گھرانوں میں پلے بڑھے بچوں میں کامیابی کا تناسب عام طلبہ سے زیادہ ہوتا ہے۔ برطانیہ کی یونیورسٹی کالج لندن کے انسٹی ٹیوٹ آف ایجوکیشن کی تحقیقی رپورٹ میں بتایا گیا ہے کہ ایسے طلبہ چاہے کسی مذہبی اسکول میں تعلیم حاصل نہ بھی کریں ان کی شعوری سطح عام بچوں سے زیادہ ہوتی ہے۔ برطانوی ماہرین کی تحقیق میں کہا گیا ہے...

← مزيد پڑھئے

کچھ پاگلوں سے ملاقات

کچھ لوگ اپنی زندگیوں کو عجیب و غریب چیزوں سے خوشگوار بناتے ہیں مثلاً ایک صاحب ہیں جن کی سارے دن کی خوشیوں کا دارومدار وہ وقت ہے جو وہ زیادہ سے زیادہ غسل خانہ میں گزار سکیں۔ موصوف صبح چھ بجےغسل خانے میں داخل ہوتے ہیں اور تمام اہل خانہ کے باری باری دروازہ پیٹنے پر آٹھ بجے باہر نکلتے ہیں اور ان کے ساتھ دھوئیں کے بادل بھی...

← مزيد پڑھئے

چیف ایڈیٹر

دفتر

  • محکمہ اطلاعات رجسٹریشن : ٧٧١
  • news.carekhabar@gmail.com
    بشال نگر، کاٹھمانڈو نیپال
Flag Counter